Oops! It appears that you have disabled your Javascript. In order for you to see this page as it is meant to appear, we ask that you please re-enable your Javascript!

زندان کی چیخ – پینتیسویں قسط

کافی دیر تک نیند یا نیم بے ہوشی کی حالت میں پڑا رہا۔ لانگری بھیا کی آواز پر احساس ہوا

Read more

زندان کی چیخ چونتیسویں قسط

حرامی کون ہے اور حلالی کون یہ میں ’’  جانتاہوں‘‘تقریباََ چیخ کر میں نے جواب دیا۔ وہ پھر مجھ پر

Read more

زندان کی چیخ ۔تینتیسویں قسط

اعترافی بیان آخر میں کیوں دیتا؟ یہ بات وہ سارے سمجھنے کے لئے تیار نہیں تھے۔ البتہ میں یہ سمجھ

Read more

زندان کی چیخ ۔بتیسویں قسط

’’پھر جب انہوں نے تمہاری والدہ کا ذکر کیا تو میں رہ نہیں سکا۔ اس ملاقات کی اجازت بہت مشکل

Read more

زندان کی چیخ ۔اکتیسویں قسط

دو دن ملے سوچنے کے لئے۔ سوال یہ تھا کہ آخر ایسے جرم کا اقراری کیونکر ہوا جائے جو سرزد

Read more

زندان کی چیخ ۔تیسویں قسط

زندان کی چیخ ۔تیسویں قسط جنرل ضیاء الحق کے دور میں پاکستان کی تاریخ کو جس طور تبدیل کرنے کا

Read more

زندان کی چیخ ۔انتیسویں قسط

جھوٹ فقط مارشل لاء کے تحت گرفتار ہونے والے سیاسی قیدیوں سے شاہی قلعہ، کورنگی کریک کیمپ اور دیگر تفتیشی مقامات

Read more

زندان کی چیخ ۔اٹھائیسویں قسط

بیماری نے طول پکڑا مہینہ بھر سے اوپر البتہ اس دوران زخم تقریباََ ٹھیک ہو گئے۔ (گھاؤ جو اندر لگے

Read more

زندان کی چیخ ۔ستائیسویں قسط

’’کسی سیاسی اجتماع میں تاریخ و سیاسیات کا ایک طالب علم بطورمقرر کیا گفتگو کر سکتا ہے۔ یہی جو میں

Read more

زندان کی چیخ ۔چھبیسویں قسط

ہفتہ بھر یا ایک دو دن اوپر تک علاج چلتا رہا۔ گردن کے زخم کے ٹانکے پانچویں دن کھل گئے۔

Read more

زندان کی چیخ ۔پچیسویں قسط

اماں سے اجازت لے کر میں اور ندیم زلفی کشن الانی کے ساتھ شکار پور کے لئے روانہ ہو گئے۔

Read more

زندان کی چیخ ۔چوبیسویں قسط

جیسے ہی گوٹھ کی مسجد میں پرئیل کی والدہ کے انتقال کا اعلان ہوا، ہر طرف سے مردوزن پرئیل کے

Read more

زندان کی چیخ ۔ تئیسویں قسط

ٹیکسی والے کو کرایہ ادا کر کے میں نے بیگ پرئیل کی گاڑی میں رکھا اور ہم گوٹھ کی طرف

Read more

زندان کی چیخ ۔بائیسویں قسط

ہوا یوں کہ سکھر کالج میں سپاف کے سیمینار میں شرکت کرچکے تو طلباء ایکشن کمیٹی سندھ (اس میں سپاف،

Read more

زندان کی چیخ ۔ اکیسویں قسط

کرنل لغاری، دوسرا افسر اور ڈاکٹر کوٹھڑی سے واپس چلے گئے۔ میں بہت دیر تک سوچتا رہا۔ یہ حکومت کے

Read more

زندان کی چیخ ۔بیسویں قسط

منصوبہ یہ تھا کہ مارشل لاء حکومت کے خلاف بنے غیر اعلانیہ اتحاد کو توڑا جائے کسی بھی قیمت اور

Read more

زندان کی چیخ ۔انیسویں قسط

بھٹو صاحب کا خاندان کئی صدیوں سے سندھ کے علاقے لاڑکانہ میں آباد تھا۔ مقابلتاََ جنرل ضیاء کا خاندان 1947ء

Read more

زندان کی چیخ ۔اٹھارویں قسط

گرگٹ کی طرح رنگ بدلنے میں ماہر فلک شیر اعوان ویسے کسی سرکاری خفیہ ایجنسی میں افسری کی بجائے اگر

Read more

زندان کی چیخ ۔سترہویں قسط

وحشیانہ تشدد سے ملے زخموں کے ٹانکے تو کھل گئے لیکن ہفتہ بھر گزر جانے کے باوجود میری حالت یہ

Read more

زندان کی چیخ ۔سولہویں قسط

مارشل لاء حکومت نے بڑوں بڑوں کی ’’چیں‘‘ بلا دی۔ خود پیپلز پارٹی کے وہ بہت سارے رہنما جو یہ

Read more
%d bloggers like this: