Oops! It appears that you have disabled your Javascript. In order for you to see this page as it is meant to appear, we ask that you please re-enable your Javascript!

بے روزگار بندر

 انسانی بستی سے دور کسی جنگل میں ندی کے کنارے ایک تیسرے درجے کا شکاری اپنا معمولی سا جال لگائے

Read more

سستا شکار

دو بھائی بہت شوقین مزاج شکاری سوکھے کیچڑ دریا کنارے بور ہوئے بیٹھے تھے ایک خوشامدی نے کہا، “صاحب جی

Read more

شکاری – انتون چیخوف

مرطوب، حبس آلود دوپہر۔ آسمان پر بادل کی کترن تک نہیں۔ ۔ ۔ دھوپ میں پکی ہوئی گھاس تھکی ماندی،

Read more
%d bloggers like this: