Oops! It appears that you have disabled your Javascript. In order for you to see this page as it is meant to appear, we ask that you please re-enable your Javascript!

فقط 1210 ووٹ لے کر ایم این اے بننے والا امیدوار

Print Friendly, PDF & Email

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری کردہ نتائج کے مطابق ملک کا ایک ایسا حلقہ بھی ہے جہاں صرف ایک فیصد سے کچھ زیادہ افراد نے ہی ووٹ کاسٹ کیا۔ بلوچستان کے چاغی، نوشکی اور کھاران کے علاقوں پر مشتمل قومی اسمبلی کے حلقے این اے 268 میں رجسٹرڈ ووٹرز میں سے صرف 1.76 فیصد ووٹرز نے ہی اپنا حق رائے دہی استعمال کیا۔

اس حلقے سے کامیاب ہونے والا امیدوار صرف اور صرف 1210 ووٹ لے کر کامیاب ہوا ہے۔اس حلقے سے متحدہ مجلس عمل (ایم ایم اے) کے امیدوار محمد عثمان بادینی 121ہ ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں۔الیکشن کمیشن کے مطابق اس حلقے میں 2 لاکھ 34 ہزار 291 ووٹرز رجسٹرڈ ہیں، جن میں سے صرف 4 ہزار 127 افراد نے ووٹ کاسٹ کیا، جن میں سے بھی 154 ووٹوں کو مختلف وجوہات کی بناءپر رد کردیا گیا۔

اس حلقے میں ووٹرز کا ٹرن آؤٹ 1.76 فیصد رہا، جو اب تک سامنے آنے والے تمام حلقوں میں سب سے کم ٹرن آؤٹ ہے۔اس حلقے مجموعی طور پر 22 امیدوار میدان میں اترے تھے، جن میں ایک بھی خاتون نہیں تھی۔اس حلقے سے انتخاب لڑنے والے امیدواروں میں دوسرے نمبر پر بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) کے محمد ہاشم رہے جنہوں نے 1137 ووٹ حاصل کیے۔محمد ہاشم محض 73 ووٹوں سے ہار گئے۔

Views All Time
Views All Time
511
Views Today
Views Today
1
یہ بھی پڑھئے:   پاکستان کا مستقبل ووٹرز کے ہاتھ میں ہے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: