Skip to Content

Qalamkar | قلم کار

جہالت، ظلم اور ناانصافی کے خلاف برسرپیکار

رمضان کی آمد آمد ہے

by جون 5, 2016 اسلام
رمضان کی آمد آمد ہے
Print Friendly, PDF & Email

Aamna Ahsanدو، تین دن میں رمضان شروع ہو جائے گا ، رمضان کا مہینہ ایک برکت،ایک عجیب سی پرخلوص ہوا لاتا ہے ۔عبادت میں دل لگنے لگتا ہے ۔
برائیوں سے دور رہنے کو دل کرتا ہے اور ہر کوئی چھوٹی چھوٹی نیکیوں میں سبقت لے جانے کی کوشش کرتا ہے ۔ شیطان قید کر دیا جاتا ہے ۔
اوپر بیان کی گئی ساری باتیں ہمیں بچپن سے بتائی جاتی ہیں ۔ مگر حقیقت اس سے مختلف ہے ، ہوتا کچھ یوں ہے کہ شیطان تو قید ہو جاتا ہے مگر سچ یہ ہے کہ اب ہمیں شیطان کے بہکاوے کی ضرورت ہی نہیں رہی ۔
یقین نہ آۓ تو دو دن بعد رمضان شروع ہو رہا ہے ، خود ہی دیکھ لیجئے گا شیطان تو قید میں ہو گا اور ہم کیا کچھ کر جائیں گے ۔
بلکہ انتظار کی کیا ضرورت ہے ابھی کسی بازار کا رخ کریں ،کپڑے سے لے کر جوتی تک ، اور آٹے سے لے کر چینی تک ہر چیز آپ کو دگنے دام میں ملے گی۔
کیوں نہ ملے ؟ یہی تو وقت ہے کمانے کا ۔
ساری دنیا اپنی خوشی کے موقعوں پر سیل لگا دیتی ہے ، مگر ہم پاکستانی ہر چیز کا دام دگنےکر دیتے ہیں ۔
ہم سارا سال جس قرآن کو الماری کے سب سے اوپر والے خانے میں رکھتے ہیں اس کے نصیب رمضان میں اکثر کھل جاتے ہیں اور بہت سے لوگ روزانہ اسے پڑھنے اور کچھ تو اسے سمجھنے کی بھی کوشش کرتے ہیں ۔ یا کم از کم ظاہر ایسا ہی کرتے ہیں ۔خواتین روز نیا سوٹ پہن کر تراویح پڑھنے جاتی ہیں ۔
وہاں موجود ہر کسی کو تنقید کا نشانہ بناتی ہیں ، نماز یوں نہیں پڑھتے، قرآن یوں نہیں پکڑتے،ہاۓ لڑکی سجدہ ایسے نہیں کرتے وغیرہ وغیرہ ۔
ایک اور کام جو رمضان میں کثرت سے ہوگا وہ ہے رزق کی بے حرمتی ۔
جتنا رزق میں اور آپ رمضان میں ضائع کریں گے شائد ہی کوئی دوسرا ملک کرتا ہوں ۔
ہم نیکی کرتے کم ہے بتاتے زیادہ ہیں ۔ وہ فلاں کے بچے بھوکے تھے میں نے راشن دلوایا۔
فلاں کو عید کے کپڑے بنا دیے ، وہ کہاں متحمل ہو سکتے ہیں بھلا ؟
ہم نیکی کریں نہ کریں ، اگلے کو ذلیل بہت اچھا کر لیتے ہیں ۔
خود کچھ کریں یا نہ کریں دوسرے کو لیکچر دینے کو ہر وقت تیار ، روزہ ہے ، یوں کرو ، روزہ ہے نه یوں نا چلو ، یوں نہ بولوں وغیرہ وغیرہ ۔
ہم رمضان میں اللّه کو خوش کرنے کے بجاۓ اپنے گھر والوں اور رشتےداروں کو خوش کرنے کو ترجیح دیتے ہیں۔
خواتین کا زیادہ سے زیادہ وقت کچن میں سب کی فرمائشیں پوری کرتے گزرتا ہے ۔
دعوتیں دیتے اور لیتے گزرتا ہے ۔
جو خواتین کچن کو کک کے حوالے کر سکتی ہیں انکا رمضان کا پورا مہینہ بازاروں میں عید کی نت نئی چیزوں کی خریداری کرتے گزرتا ہے ۔
ہم پاکستانی ایک ہی ملک میں رہتے ہوۓ ، ایک دن نہ ہی رمضان کا چاند دیکھ پاتے ہیں نہ عید کا ۔
ہم جو پورا مہینہ روزے رکھتے ہیں کچھ کھاتے پیتے نہیں ، اللّه پاک نے یہ مقدس مہینہ اس لئے نہیں دیا کیا ہم بھوک سے مر جائے بلکہ ان روزوں کا یہ اثر ہو کہ ہم صبر کرنا سیکھ لیں لیکن افسوس ہم نے سب کچھ سیکھ لیا سواۓ صبر کے ۔
رمضان شروع تو ہونے دیں ، ہر انسان جتنی بے صبری دکھا سکتا ہے دکھاتا ہے ۔
اب آپ انصاف سے خود فیصلہ کیجئے کہ بھلا ہمیں شیطان کے بہکاوے کی ضرورت ہے ؟
نہیں بالکل نہیں۔ بلکہ اب شیطان جب قید سے آزاد ہو تو اسے ہم انسانوں سے ٹریننگ لینی چاہیے ۔ ٹھیک کہہ رہی ہوں نہ ؟
خیر یہ سب چھوڑیں آپ سب کو رمضان بہت بہت مبارک ۔

Views All Time
Views All Time
935
Views Today
Views Today
1
Previous
Next

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

%d bloggers like this: