ڈ پریشن، ذہنی اور اعصابی تناؤ اور اس کا حل | رابعہ صدیق

Print Friendly, PDF & Email

ڈ پریشن دور جدید کی عام ذہنی اور اعصابی بیماری ہے۔ اس کا شکار زیادہ تر مغربی ممالک کے افراد ہیں۔جو بے چینی،ناامیدی اور پریشانی جیسی علامات کے حامل اس مرض کا شکار ہیں۔ ڈپریشن کوئی خاص بیماری نہیں ہے۔ یہ چند مشکلات اور مسائل کی وجہ سے پیش آتی ہے۔ اس کی علامات میں پریشانی،سستی،سردرد،کمزوری،تھکاوٹ،بے چینی اور نا امیدی شامل ہے۔
ان سب علامات کے بعد آپ کو درج ذیل علامات پر عمل کرنا چاہئے تا کہ ڈپریشن سے نجات حاصل کر سکیں۔
رات کو جلدی سونے کی کوشش کریں اور صبح سویرے اٹھ جائیں نماز اور قران پاک باقاعدگی سے پڑھیں۔ اس کے بعدجسمانی صحت کو برقرار رکھنے کے لئے ضروری ہے کہ صبح کی تازہ ہوا میں ہوا خوری کی جائےاور ہلکی پھلکی ورزش کریں تا کہ آپ کا سارا دن پریشانیوں سے پاک ہو۔ غیر نصابی اور تفریحی سرگرمیوں میں ضرور حصہ لیں بلکہ اپنے معمول میں تفریح اور کھیل کے لئے وقت مخصوص کریں تاکہ آپ جسمانی اور ذہنی طور پر ریلیکس ہوسکیں۔ ڈپریشن فارغ اوقات میں زیادہ شدت اختیار کر لیتا ہے۔ کیوں کہ طرح طرح کے خیالات اور تفکرات سے انسانی دماغ تھک جاتا ہے اور زندگی کی رنگینیاں مدھم ہو کر رہ جاتی ہیں۔ ڈپریشن سے چھٹکارے کے لئے تخلیقی صلاحیتوں کو اجاگر کرنا چاہیے۔ جن میں ڈرائینگ ،پینٹنگ اور تحریری سرگرمیاں شامل ہیں۔ آپ ان سرگرمیوں میں دل چسپی سے کام کریں۔ آہستہ آہستہ آپ ذہنی سکون حاصل کریں گے۔ اس طرح کی مصروفیات آپ کو ڈپریشن کے علاوہ دیگر نفسیاتی امراض سے بھی نجات دلاسکتی ہیں

Views All Time
Views All Time
448
Views Today
Views Today
2
یہ بھی پڑھئے:   سحر اور زینب کی باتیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: