Skip to Content

Qalamkar | قلم کار

جہالت، ظلم اور ناانصافی کے خلاف برسرپیکار

مِسڈ کال | ممتاز شیریں

by اگست 10, 2017 بلاگ
مِسڈ کال | ممتاز شیریں
Print Friendly, PDF & Email

کل رات کو اللہ تعالی کی طرف سے کال موصول ہوئی۔اکثر کال آتی ہے لیکن بسا اوقات نیند کے غلبے کی وجہ سے پتہ ہی نہیں لگ پاتا،یا پھر سستی کی وجہ سے ہم خود اٹینڈ نہیں کر پا تے۔رات 3 بجے کا وقت تھا سوچا اس کال کو بھی "مس "کر دوں صبح اٹھ کر خود کال کر لوں گی۔لیکن کال کرنے والے نے ہی کال کی اہمیت کا احساس دلایا،کال کرنے والےنے ہی ہمت دی۔اٹھی،تیاری پکڑی،مصلی بچھایا،تہجد کی نیت کی۔سورۃفاتحہ پڑھتے ہوئے ایسا مزا آیا کہ بیان سے باہرہے۔پھر خود بخود سورۃ ضحیٰ پر ہونٹ چلنے لگے

والضحیٰ!قسم ہے وقت چاشت کی
والیل اذاسجیٰ!(قسم ہے رات کی جب پُر سکون ہو جائے،)
مجھے ایسا لگا اللہ اسی وقت کی قسم کھا رہا ہو۔میرے ارد گرد رات کی تاریکی انتہائی پُر سکون تھی
ما ودعک ربک وماقلی!(تیرے پروردگار نے تجھے نہ چھوڑا اور نہ تجھ سے بیزار ہوا

یہ آیت نازل تو حضور صلی و علیہ وسلم پر ہو ئی تھی لیکن مجھے ایسا لگا اس وقت اللہ مجھ سے مخاطب ہو ،میں گذشتہ کچھ دنوں سے فرسٹریشن کا شکار تھی،ایسا لگتاتھا جیسے اللہ میری دعائیں نہیں سن رہاہے وہ مجھ سے ناراض ہے،اس نے مجھے چھوڑ دیا ہے،یہ آیت پڑھتے ہوئے میں پھوٹ پھوٹ کررو دی
وللا خرۃ خیر لک من ال اولیٰ
تحقیق بعد کا دور تیرے لئےبہتر ہے پہلے والے دور سے)،(یہاں اللہ نے مجھے تسلی دی کہ دنیاوی معاملات میں بظاہر بہتری نظر نہ آنا کوئی مسئلہ نہیں ہے کیونکہ آنے والا دور اچھا ہے)
ولسوف یعطیک ربک فترضیٰ
عنقریب تیرا رب تجھےعطا کرے گا،تو تُو خوش ہو جائے گی۔میں ابھی سے خوش ہو گئی کہ میرے رب کا وعدہ ہو گیا تو سمجھو مل گیا۔الم یجدک یتیماً فاویٰ(کیا اس نے تجھکو یتیم پایا،تو ٹھکانہ نہ دیا)
بلاشبہ دیا،میں چار سال کی تھی جب میرے والد کا انتقال ہوا،آج کتنے سال گذر گۓ ہیں الحمداللہ! میرے اللہ نے مجھے بہت اچھے حال میں رکھا ہوا ہے
ووجدک ضالاً فھدیٰ (اور تجھے پایا تھا متلاشی ،تو تجھے راہ نہ دکھائی؟)
بے شک دکھائی۔ والدکے انتقال کے بعد ہمارے پورے گھرانے میں مذہب کی طرف رحجان پیدا ہوا،جس پر میں کہتی ہوں کہ یہ مہنگا سودا نہیں۔
ووجدک عائلاً فاغنیٰ(اور تجھے پایا تھا محتاج تو تجھے غنی نہ کیا؟) ضرور کیا! والد کے انتقال کے بعد ہمارے مالی حالات بہت خراب ہو گئے تھے لیکن پھر اللہ نے بہتری دی،اور اب اللہ کا کرم ہم بہت سوں سے بہتر ہیں

فاماّالیتیمَ فلا تقھر۔ تو جو یتیم ہو اسے دبانا مت ۔ یعنی اللہ پاک مجھے یتیموں کے ساتھ رحم کرنے کہہ رہا ہے
واماالسائل فلا تنھراور سوالی کو مت جھڑکنا۔ایسا لگا اللہ کہہ رہا ہو کہ سوالی کو جھڑکنے سے پہلےسوچنا اگر ہم نے تمہیں جھڑک دیا تو تمہاراکیا ہو گا
وَاّمَابنعمتہ ربک فحدثاور اپنے رب کی نعمت بیان کرو۔ ایسا لگا کہ اللہ کہہ رہا ہو کہ اس کیفیت کو لوگوں کو بتاؤ کہ اللہ باتیں کرنے کے لئے منتظر بیٹھا ہے ،وہ تو کال کرتا ہے ہم ہی ریسیو نہیں کر تے ۔یہ با تیں وہ ہم سب سے بیک وقت کر سکتا ہے اور بہت سوں سے کرتابھی ہے جو رات میں اللہ کے سامنے جھولی پھیلاتے ہیں۔ تو وہ دن میں ان سب کو غنی کر دیتا ہے ،کمی اس کے دینے میں نہیں ہمارے مانگنے میں ہے۔
ہم تو مائل بہ کرم ہیں کوئی سائل ہی نہیں
راہ دکھلائیں کِسےراہرو منزل ہی نہیں

Views All Time
Views All Time
219
Views Today
Views Today
1
یہ بھی پڑھئے:   سب شہید ہیں تو خود کش کیوں نہیں ؟ - ابن حیدر
Previous
Next

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

%d bloggers like this: