شریعت کی قبا والے وہ سب مہرو وفا والے  بہتر کربلا والے

Print Friendly, PDF & Email

شریعت کی قبا والے وہ سب مہرو وفا والے  بہتر کربلا والے
وہی تو تھے خدا  والے محمد مصطفی والے  بہتر کربلا والے
وہ فخر ِ دوجہاں ٹھہرے وہ دیں کا سائباں ٹھہرے فلک کی کہکشاں ٹھہرے
وہ رحمت کی گھٹا والے خزاؤں میں صبا والے بہتر کربلا والے
وہی سب نازِ شریعت ہیں حروف ِ جامعیت ہیں وہی رمزَ حقیقت ہیں
وہ ہیں سوزو وفا والے انوکھی ہر ادا والے بہتر کربلا والے

انہیں عہدِ وفا دیکھیں محمد کی دعا دیکھیں خدا کی اک عطا دیکھیں
وہ ہیں جام ِبقا والے رضا کی انتہا والے بہتر کربلا والے
انہیں جانِ جہاں کہیے انہیں حق کی زباں کہیے انہیں جائے اماں کہیے
معطر سی فضا والے وہ تھے صبح ِ ضیا والے بہتر کربلا والے
وہی ہیں ساحل و منزل وہ جب تھے رونقِ مقتل کہاں تھا ہائے میں فیصل
شبیہِ مصطفٰی والے وہ تھے حق کی صدا والے بہتر کربلا والے

شاعر: فیصل زمان چشتی

Views All Time
Views All Time
229
Views Today
Views Today
1
یہ بھی پڑھئے:   کرتے ہیں قلم روز قلم کار کے بازو

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: