Skip to Content

Qalamkar | قلم کار

جہالت، ظلم اور ناانصافی کے خلاف برسرپیکار

دانشور | عامر راہداری

by اکتوبر 18, 2017 حاشیے
دانشور | عامر راہداری
Print Friendly, PDF & Email

ہمارا ملک زراعت کی طرح دانشوروں میں بهی خود کفیل ہے. اب تو ہر گهر میں ایک بندہ دانشور پیدا نہ ہو تو میاں بیوی کی "زرخیزی” پر شک کیا جانے لگتا ہے. یہاں کے دانشور بهی اختلاف رائے اور استعمال چائے میں "بے لگام” ہیں. دانشوروں کی ایک قسم ایسی بهی ہے جو صرف بڑے دانشوروں کی نظروں میں دانشور ہوتے ہیں عرف عام میں انہیں "مالشور” کہا جاتا ہے ان کا کام یہ ہوتا ہے کہ مختلف لوگوں کو اپنے "دانشور” کی دانشوری سناتے ہیں. ہمارے ہاں سب سے بڑا دانشور وہ ہوتا ہے جو دوسروں کی نظروں سے پوشیدہ ہو. سوشل میڈیا پر بڑے دانشور کی مثال یوں دی جاسکتی ہے کہ جس کی جتنی بڑی بلاک لسٹ ہوگی وہ اتنا بڑا دانشور ہوگا. آج کل صنف نازک میں بهی دانشوری کا اسٹاک موجود ہے. مونث دانشوری پاکستان میں بہت کامیاب ہے کیوں کہ ایسے دانشور کو اختلاف رائے کا سامنا نہیں کرنا پڑتا. مونث دانشوروں کی محفل اکثر مذکر دانشوروں سے ہری بهری رہتی ہے. مونث دانشوری اگر خوش قسمتی سے حسین بهی ہو تو سولہ چاند لگ جاتے ہیں بلکہ اکثر سورج بهی لگ جاتے ہیں. دانشوری کو ناپنے کے لئے آج کل ٹائم لائن پر لوگوں کی تعداد دیکهی جاتی ہے اگر تو لڑکیاں زیادہ ہوں تو دانشور عظیم تصور ہوگا اور لڑکے زیادہ ہوں تو ایسے دانشور کو بے چارہ کہہ سکتے ہیں. دنیا میں دانشور ترقی پسند ہوتے ہیں ہمارے ہاں "لڑکی پسند” ہوتے ہیں.

Views All Time
Views All Time
363
Views Today
Views Today
1
یہ بھی پڑھئے:   گال چھو لئے تو کیا ہوا (حاشیے) | زری اشرف
Previous
Next

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

%d bloggers like this: